مہاتما گاندھی کیخلاف نفرت انگریز تقریر کرنے پر مذہبی رہنما گرفتار

0
66
فوٹو : بشکریہ لگاتارنیوز

ہندوستان کے بابائے قوم مہاتما گاندھی کے خلاف نامناسب زبان استعمال کرنے اور ان کے قاتل کی تعریف کرنے کے الزام میں ہندو مذہبی رہنما کو پولیس نے گرفتار کرلیا ہے۔

نیوز ایجنسی پریس ٹرسٹ آف انڈیا کو پولیس افسر پرشانت نے بتایا کہ مذہبی رہنما کالی چرن مہاراج کو ریاست مدہیہ پردیش سے رواں ہفتے مذہبی گروہوں کے درمیان مہاتما گاندھی کے خلاف نفرت پھیلانے کے الزام میں گرفتار کیا گیا ہے۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق کالی چرن مہاراج نے اپنے بیان میں کہا کہ ’گاندھی نے ملک کو تباہ کردیا۔۔۔ ناتھورام گوڈسے کو سلام جس نے اسے قتل کیا۔‘

گرفتار مذہبی رہنما کو پولیس کی جانب سے تفتیش مکمل کرنے کے بعد عدالت میں پیش کیا جائے گا۔ کالی چرن مہاراج کو جرم ثابت ہونے پر پانچ سال قید کی سزا ہوسکتی ہے۔

خبر رساں ایجنسی ’اے پی‘ کے مطابق مہاتما گاندھی کو 1948 میں بھارتی دارالحکومت میں ایک ہندو انتہا پسند نے مسلمانوں سے ہمدردی رکھنے پر قتل کر دیا تھا۔

جواب چھوڑ دیں

براہ مہربانی اپنی رائے درج کریں!
اپنا نام یہاں درج کریں