مقبوضہ بلوچستان: تین طالب علم پاکستانی فورسز ہاتھوں جبری گمشدگی کا شکار

0
16

مقبوضہ بلوچستان کے ضلع قلات اور پنجگور سے پاکستانی فورسز نے طالبعلم سمیت تین افراد کو حراست میں لینے کے بعد نامعلوم مقام پرمنتقل کردیا۔اطلاعات کے مطابق پاکستانی سیکیورٹی فورسز نے 30 نومبر کو قلات کے علاقے منگچر سے عبدالرشید ولد میر احمد کو اسکے دکانسے حراست میں لیکر اپنے ہمراہ لے گئے۔

علاقہ مکینوں کا کہنا ہے کہ پاکستانی فورسز کی بڑی تعداد نے بازار میں ناکہ بندی کرتے ہوئے مذکورہ نوجوان کو اس کے دکان سے حراست میں لیکر نامعلوم مقام پر منتقل کردیا۔

دریں اثناء ضلع پنجگور کے علاقے پروم سے گذشتہ رات پاکستانی فورسز نے ایف ایس سی کے طالبعلم عبداللہ کو ان کے چچا محبوب بلوچ کے ہمراہ جبری طور پر لاپتہ کردیا ہے۔علاوہ ازیں مزید ایک شخص کی پنجگور سے جبری گمشدگی اطلاعات ہیں
مذکورہ واقعات اس وقت سامنے آئیں جب سماجی رابطوں کی سائٹ پر 25 اکتوبر 2022 کو جبری طور پر لاپتہ طالب علم سعود نازکے حوالے سے آگاہی مہم چلائی جارہی تھی۔

جواب چھوڑ دیں

براہ مہربانی اپنی رائے درج کریں!
اپنا نام یہاں درج کریں