عالمی سطح پر درجہ حرارت نے تمام ریکارڈ توڑ دیئے

0
24

رواں سال جولائی میں عالمی سطح پر گرمی کے تمام ریکارڈ ٹوٹ گئے ہیں اور ریکارڈ بلند درجہ حرارت رہا ہے۔ اس سے قبل عالمی سطح پر جولائی 2019ء گرم ترین مہینہ رہا تھا۔

اقوام متحدہ کے سربراہ نے مطالبہ کیا ہے کہ زمین کے عالمی سطح پر ابلنے کے دورمیں ریڈیکل اقدامات کئے جائیں۔

’الجزیرہ‘ کے مطابق اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل انتونیو گوٹیرس نے جمعرات کو موسمیاتی تبدیلی پر فوری ریڈیکل کارروائی کی التجا کرتے ہوئے کہا کہ جولائی میں ریکارڈ توڑنے والا درجہ حرارت ظاہر کرتا ہے کہ زمین گرمی کے مرحلے سے عالمی سطح پر ابلتے ہوئے دور میں داخل ہو چکی ہے۔

گرمی کی لہر شمالی نصف کرہ کو اپنی لپیٹ میں لے رہی ہے، جس میں یورپ اور امریکہ کے کچھ حصے شامل ہیں۔ ریکارڈ بلند درجہ حرارت بحیرہ روم کے ساتھ ساتھ یونان، اٹلی اور الجزائر جیسے ملکوں میں تباہ کن جنگلات کی آگ کو متحرک کر رہا ہے۔

انتونیو گوٹیرس نے شمالی نصف کرہ میں شدید گرمی کو ظالم موسم قرار دیا۔ انہوں نے کہا کہ یہ پورے سیارے کیلئے ایک تباہی ہے۔ اگلے دنوں میں ایک چھوٹے برفانی دور کا مختصر عرصہ پورے بورڈ میں ریکارڈ توڑ دے گا۔

یورپی یونین کی مالی امداد سے چلنے والی کوپرنیکس کلائمیٹ چینج سروس کے ’ERA5‘ کے اعداد و شمار کے مطابق جولائی کے پہلے تین ہفتے ریکارڈ گرم ترین تین ہفتوں کا عرصہ رہا ہے اور یہ مہینہ ریکارڈ گرم ترین مہینہ ہونے کی راہ پر ہے۔ ریکارڈ پر پچھلا گرم ترین مہینہ جولائی 2019ء تھا۔

جولائی کے دوران شدید موسم نے پوری دنیا میں تباہی مچا دی ہے۔ چین، امریکہ اور جنوبی یورپ میں درجہ حرارت ریکارڈ توڑ رہا ہے، جنگلات میں لگی آگ، پانی کی قلت اور گرمی سے متعلق بیماریوں میں اضافہ ہو رہا ہے۔

اٹلی کے جزیرے سسلی پر منگل کے روز جنگل کی آگ سے جلے ہوئے ایک گھر میں دو افراد پردہ پائے گئے۔ الجزائر میں کم از کم 34 افراد ہلاک اور یورپ کے کچھ حصوں میں بحیرۂ روم کے بڑے علاقوں اور دیگر خطوں میں شدید گرمی کی لہر کی وجہ سے ہزاروں افراد کو بے دخل کر دیا گیا ہے۔

یونان میں روڈز جزیرے پر گزشتہ ایک ہفتے سے لگی آگ نے حکام کو ملک میں اب تک کا سب سے بڑا انخلا کرنے پر مجبور کر دیا ہے۔ 20 ہزار سے زائد افراد گھروں اور ہوٹلوں کو چھوڑنے پر مجبور ہو گئے ہیں۔

جواب چھوڑ دیں

براہ مہربانی اپنی رائے درج کریں!
اپنا نام یہاں درج کریں