حماس نے اسرائیلی فوج کے میجر جنرل کو یرغمال بنالیا۔ عرب میڈیا

0
18

ویڈیو کلپس میں فلسطینی دھڑوں کے افراد کو 5 اسرائیلی فوجیوں کو پکڑتے اور گھومتے دکھایا گیا ہے

غزہ کی پٹی سے حماس نے اسرائیلی علاقوں میں پانچ ہزار راکٹ داغ کر آپریشن شروع کردیا۔ اس دوران پانچ اسرائیلی فوجیوں کو اغوا بھی کرلیا گیا۔ اب سوشل میڈیا پلیٹ فارمز پر ایسی ویڈیوز بھی گردش کرنے لگی ہیں جن میں صہیونی فوجیوں کو اغوا کرنے کے مناظر دکھائے جارہے ہیں۔

گردش کرنے والے ویڈیو مناظر میں دیکھا جا سکتا ہے کہ فلسطینی دھڑے کے اسرائیلی قیدیوں کو بستیوں سے اغوا کر کے موٹر سائیکلوں پر غزہ کی پٹی میں لے جا رہے ہیں۔

اسرائیلی فوج کی “جیپ” کو قبضے میں لینے کے بعد غزہ کی سڑکوں سے نئے مناظر سامنے آئے ہیں کہ سینکڑوں فلسطینی غزہ کی پٹی کے دورے کے دوران پرجوش نعرے لگا رہے ہیں اور اس جنگ کے مال غنیمت کے طور پر اسرائیلی فوجیوں کو دیکھ کر خوشی منا رہے ہیں۔
ویڈیو کلپس میں فلسطینی دھڑوں کو 5 اسرائیلی فوجیوں کو پکڑتے اور ان کے ساتھ غزہ کی پٹی میں گھومتے ہوئے فلسطینی نوجوانوں کے درمیان بھی دکھایا گیا۔ یہ نوجوان اسرائیلی فوجیوں کو لے جانے والی بس کے گرد جمع تھے۔

غزہ سے راکٹ داغے جانے، فلسطینی عسکریت پسندوں کی اسرائیلی بستیوں میں دراندازی، اسرائیلی فوجیوں کو یرغمال بنانے اور اسرائیلی فورسز کے ساتھ جھڑپوں پر مشتمل ’’ طوفان الاقصی‘‘ کے نام سے اس آپریشن نے دنیا کو حیران کردیا ہے۔

اسرائیلی فوج نے بھی غزہ کی پٹی میں حماس کے اہداف کے خلاف آپریشن کے نفاذ کا اعلان کردیا ہے۔ اور آپریشن ’’ آہنی تلواروں‘‘ کے عنوان سے جوابی آپریشن شروع کردیا ہے۔ غزہ کی پٹی میں سینکڑوں افراد نے نقل مکانی کرلی ہے۔
دریں اثنا حماس کے میڈیا نے متعدد اسرائیلی فوجیوں کے پکڑے جانے کی تصدیق کی ہے ۔ تصاویر میں غزہ کی پٹی میں اسرائیلی ٹینکوں اور فوجی گاڑیوں کا کنٹرول دکھایا گیا ہے۔ غزہ کے کچھ پریس ذرائع نے اسرائیل کی جانب سے طویل فاصلے تک مار کرنے والے میزائلوں سے گولہ باری کی اطلاع بھی دی ہے۔

اسرائیلی اخبار “ہارٹز” نے اطلاع دی ہے کہ مسلح فلسطینی بیر سبع کے مغرب میں ایک بستی میں ایک گھر میں خود کو یرغمال بنائے ہوئے تھے۔ اس سے قبل ’’العربیہ‘‘ کے نامہ نگاروں نے اطلاع دی تھی کہ فلسطینی عسکریت پسندوں نے غزہ کی پٹی کے اطراف میں 4 بستیوں میں گھس کر لوگوں کو یرغمال بنایا اور اسرائیل کے اندر کئی علاقوں کا کنٹرول بھی سنبھال لیا۔

ٹی وی فوٹیج میں غزہ سے داغے گئے میزائلوں کے مغربی کنارے اور القدس کے درمیان واقع علاقے میں گرنے اور اسرائیل کے آئرن ڈوم سسٹم کے ذریعے ان کو روکے جانے کو بھی دکھایا گیا ہے۔ اسرائیلی میڈیا نے وسطی اور جنوبی اسرائیل کے ایئرپورٹس کی بندش کی خبر بھی دے دی ہے۔

غزہ کی پٹی سے راکٹ فائر کیے جانے کے بعد القدس میں سائرن بجنے لگے۔ غزہ کی پٹی کے اطراف میں واقع بستیوں میں سے ایک میں اسرائیلی فوج اور فلسطینی عسکریت پسندوں کے درمیان جھڑپیں ہوئیں۔ اسرائیلی وزیر دفاع نے ملٹری ریزرو فورسز کو بلانے پر اتفاق کیا ہے۔ اسرائیلی فوج نے دھمکی دی ہے کہ حماس کو راکٹ حملوں کے نتائج بھگتنا پڑیں گے۔

عرب میڈیا کے مطابق فلسطین کے علاقے غزہ کی مزاحمتی تنظیم حماس کے جنگجو اسرائیل پر حملوں کے دوران 50 اسرائیلی فوجی اور شہریوں کو یرغمال بنا کر ساتھ لے گئے۔

آج صبح حماس نے غزہ سے اسرائیل پر زمین، سمندر اور فضا سے حملے کیے جس کے نتیجے میں اسرائیلی فوجیوں سمیت 40 اسرائیلی ہلاک، 700 سے زائد زخمی ہوگئے جن میں سے درجنوں کی حالت تشویشناک ہے۔

سوشل میڈیا پر وائرل کئی ویڈیوز میں دیکھا جا سکتا ہے کہ حماس کے جنگجوؤں نے کئی اسرائیلی فوجیوں اور شہریوں کو یرغمال بنالیا ہے۔اور اب اسرائیلی میڈیا نے تصدیق کی ہے کہ حماس کے جنگجو حملوں کے دوران 50 اسرائیلی فوجیوں اور شہریوں کو یرغمال بنا کر ساتھ لے گئے۔
فلسطین اور اسرائیل کے درمیان نئی جنگ، حماس کے اسرائیل پر زمین، سمندر اور فضا سے حملے، 40فوجی ہلاک ،دوسری جانب عرب میڈیا نے دعویٰ کیا ہے کہ حماس کے جنگجوؤں اسرائیلی فوج کے میجر جنرل نمرود الونی کو بھی یرغمال بنا کر ساتھ گئے ہیں

جواب چھوڑ دیں

براہ مہربانی اپنی رائے درج کریں!
اپنا نام یہاں درج کریں