پارہ چنار کے لوگوں کا قتل عام بند کیا جائے، ڈاکٹر شفقت شیرازی

0
21

سربراہ مجلس علماء امامیہ پاکستان و سیکرٹری امور خارجہ مجلس وحدت مسلمین ڈاکٹر علامہ سید شفقت حسین شیرازی نے کہا ہے کہ پارہ چنار ایک خوبصورت وادی ہے، اسٹریٹیجک اور جیو پولیٹیکل اعتبار سے ایک حساس سرحدی علاقہ ہے اور سالہال سے انکے ساتھ ریاست کا ناروا سلوک ناقابل برداشت ہے، آخر پارہ چنار کے امن کو باربار خراب کرنے کی کوششوں کے پیچھے کونسی طاقت ہے جس تک ریاستی ہاتھ نہیں پہنچ رہے۔

ان کا کہنا تھا کہ پارہ چنار یعنی سابقہ فاٹا کے علاقے اب تک مکمل طور پر فوج کے کنٹرول میں ہیں اور اگر ان علاقوں کی امنیت و سلامتی خطرے میں پڑتی ہے تو سوال ریاستی اداروں کی کارکردگی پر اٹھے گا، لہذا اداروں کو اپنے رویے پر نظر ثانی کرتے ہوئے اپنی ذمہ داریوں کو پورا کرنا ہوگا تاکہ یہاں کے محب وطن لوگوں کا خون بہانا بند کیا جاسکے، ناقص حکمت عملی اور ناعاقبت اندیشی کی وجہ سے اس علاقے میں نفرتوں کے بیچ بوئے گئے تاکہ یہ قبائل ہمیشہ دست وگریباں رہیں اور انکا خون بہتا رہے اس علاقے کے عوام سے ریاست کے زمہ داران نے دشمنی کی اور یہاں دہشتگردوں کو محفوظ پناہیں فراہم کیں۔جن کا خمیازہ آج وہاں کی مظلوم عوام بھگت رہے ہیں۔

جواب چھوڑ دیں

براہ مہربانی اپنی رائے درج کریں!
اپنا نام یہاں درج کریں