کراچی: گلستان جوہر میں خاتون، 3 بچوں کی گلہ کٹی لاشیں برآمد، قتل کے شبہے میں شوہر گرفتار

0
12

پولیس کے مطابق جمعرات کی صبح ایک عورت اور اس کے دوبیٹوں اور ایک بیٹی سمیت 3 افراد کی گلہ کٹی لاشیں بلاک 5 شیر محمد گوٹھ سے برآمد ہوئیں۔

گلستان جوہر تھانے کے اسٹیشن ہاؤس افسر (ایس ایچ او) فہد الحسین کا کہنا تھا کہ پولیس نے ارشد علی کو اپنی اہلیہ اور تین بچوں کے قتل کے الزام میں حراست میں لے لیا ہے کیونکہ ملزم کے سسر نے ارشد علی کے واقعے میں ملوث ہونے کا خدشہ ظاہر کیا، ساتھ ہی ابتدائی تحقیقات کے دوران ملزم 3 دفعہ اپنا بیان بدل چکا ہے۔

ایس ایچ او نے کہا کہ مددگار 15 پر واقعے کی اطلاع ملتے ہی وہ جائے وقوعہ پر پہنچے، جب پولیس ٹیم گھر میں پہنچی تو ارشد علی بظاہر ایک عام انسان کی طرح پیش آیا، وہ مطمئن تھا اور اسے کوئی افسوس نہیں تھا۔

پولیس نے قانونی کارروائی مکمل کرنے کے لیے لاشیں جناح پوسٹ گریجویٹ میڈیکل سینٹر منتقل کردیں، پولیس کے کرائم سین یونٹ کو بلایا گیا جنہوں نے جائے وقوعہ سے ایک خون لگے چاقو سمیت دیگر شواہد جمع کیے۔

پولیس کے مطابق انہوں ملزم کو تحقیقات کے لیے بلایا تھا، ارشد علی نے ابتدائی طور پر بتایا کہ وہ بدھ کو 8 بجے اپنے ماموں کے گھر گیا اور جب وہ رات کے 2 بجے گھر واپس آیا تو اس نے اپنی اہلیہ اور تینوں بچوں کو گلہ کٹے مردہ حالت میں پایا۔

مزید تفتیش کرنے پر ملزم نے بتایا کہ وہ گزشتہ 20 سالوں سے کرسٹل نشے کا عادی ہے اور وہی لینے گیا تھا، ملزم کے تیزی سے بیان بدلنے کی وجہ سے پولیس نے اسے حراست میں لے لیا، ملزم کے سسر نے بھی پولیس کو آگاہ کیا کہ ان کی کسی کے ساتھ کوئی دشمنی نہیں، اس کے علاوہ پڑوسیوں نے بھی تحقیقاتی افسران کو چند شواہد فراہم کیے۔

ملزم ایک کیبل نیٹ دوکان کا مالک ہے، اس کے علاوہ ملزم اسی علاقے میں کرائے پر دیےگئے تین گھروں کا بھی مالک ہے، افسر نے کہا کہ وہ قانونی تقاضے پورے کرنے کے بعد متاثرہ خاتون کے والد کی شکایت پر ارشد علی کو باضابطہ طور پر گرفتار کریں گے۔

جواب چھوڑ دیں

براہ مہربانی اپنی رائے درج کریں!
اپنا نام یہاں درج کریں