پاکستانی فوج پر بلوچ آزادی پسند تنظیموں کے حملے

0
233

مقبوضہ بلوچستان کے ضلع کیچ میں بی ایل ایف اور کوئٹہ میں بی ایل اے نے حملے کی ذمہ داری قبول کر لی

بلوچستان لبریشن فرنٹ کے ترجمان میجر گہرام بلوچ نے میڈیا کو جاری بیان میں کہا ہے کہ آج جمعہ کے روز تین بج کر بیس منٹ کے وقت گومازی کے علاقے اپسی کہن میں بان پیر ڈک پر قائم پاکستانی فوجی چوکی میں ایک اہلکار کو اسنائپر سے نشانہ بنا کر ہلاک کیا ہے،۔
انہوں نے کہا ہے کہ پاکستانی فورسز پر حملے مقبوضہ بلوچستان کی آزادی تک جاری رہیں گے ۔

بلوچ لبریشن آرمی کے ترجمان جیئند بلوچ نے میڈیا کو جاری کردہ بیان میں کہا ہے کہ بی ایل اے کے سرمچاروں نے کوئٹہ میں بروری کے علاقے مسلم ٹاون عیسیٰ نگری میں قابض پاکستانی فوج کے فرنٹیئر کور کے ایک کانوائے کو آئی ای ڈی حملے میں نشانہ بنایا۔ حملے میں قابض فوج کے متعدد اہلکار ہلاک و زخمی ہوئے جبکہ دھماکے سے ان کی گاڑی کو شدید نقصان پہنچا۔

جیئند بلوچ نے کہا ہے کہ بی ایل اے اس حملے کی ذمہ داری قبول کرتی ہے، ہماری جدوجہد آزاد وطن کے حصول تک جاری رہیگی۔

جواب چھوڑ دیں

براہ مہربانی اپنی رائے درج کریں!
اپنا نام یہاں درج کریں