جنوبی وزیرستان:پاکستانی فوج پربڑا حملہ، ٹی ٹی پی کا 12اہلکاروں کی ہلاکت کا دعوی

0
122

جنوبی وزیرستان میں پاکستانی فوج کے چیک پوسٹ پر مسلح افراد کا شدید حملہ اورتحریک طالبان پاکستان نے حملے کی ذمہ داری قبول کرتے ہوئے 12 اہلکاروں کی ہلاکت کا دعوی کیا،جبکہپاکستانی فوج کے ترجمان آئی ایس پی آر نے دعویٰ کیا ہے کہ4 فوجی مارے گئے ہیں اور جوابی حملے میں چار حملہ آور بھی مارے گئے ہیں۔

حملے کی ذمہ داری تحریک طالبان پاکستان نے قبول کی ہے۔ ترجمان محمد خراسانی نے بیان جاری کرتے ہوئے کہا ہے کہ گذشتہ شب عشاء کے وقت جنوبی وزیرستان کی تحصیل مکین کے علاقہ رازین خولہ کے مقام پر تحریک طالبان پاکستان کے مجاہدین نے پاکستانی فوج کی پوسٹ پر ایک بڑا حملہ کیا۔
ترجمان کا مزید کہنا ہے کہ حملے کے نتیجے میں پاکستان فوج کے 12 اہلکار ہلاک اور متعدد زخمی ہوئے، جبکہ مجاہدین کو فتح شدہ پوسٹ سے“کلاشنکوف”“جی تھری گن”اور دیگر اسلحہ غنیمت کی صورت میں ہاتھ آیا حملے میں ہمارے تمام ساتھی محفوظ رہے۔

پاکستان فوج کے شعبہ تعلقات عامہٓئی ایس پی آر کے مطابق جنوبی وزیرستان کے علاقے مکین میں فورسز اور مسلح افراد کا مقابلہ ہوا اور اس دوران مسلح افراد کی فائرنگ سے 4 اہلکار مارے گئے۔
آئی ایس پی آر کے مطابق فورسز کی جوابی فائرنگ کے نتیجے میں 4 حملہ آور بھی مارے گئے۔
آئی ایس پی آر کے مطابق ہلاک ہونے والے اہلکاروں میں لانس نائیک عمران علی، سپاہی عاطف جہانگیر، سپاہی عزیز اور سپاہی انیس الرحمان شامل ہیں۔

جواب چھوڑ دیں

براہ مہربانی اپنی رائے درج کریں!
اپنا نام یہاں درج کریں