ہم پاکستان سے انصاف کی بھیک نہیں مانگتے، عالمی برادری کو اپنا کردار ادا کرنا چائیے، ڈاکٹر اللہ نذر

0
13

بلوچ آزادی پسند رہنما اور بلوچستان لبریشن فرنٹ کے سربراہ ڈاکٹر اللہ نذر بلوچ نے مائیکرو بلاگنگ ویب سائٹ ”ٹوئٹر”پر اپنے تین سلسلہ وار ٹویٹس میں پاکستان کی عدلیہ، پارلیمنٹ اورمیڈیا کوشدید تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے انہیں پاکستانی فوج کے ساتھ بلوچ قوم کیخلاف ایک ہی صفحہ پر قرار دیا ہے۔

بلوچ رہنما نے کہا ہے کہ بلوچ قوم کے خلاف پارلیمنٹ، عدلیہ، ایگزیکٹو، میڈیا اور فوج ایک صفحہ پر ہیں۔ بلوچوں کو کبھی بھی پاکستان کی deep state

سے انصاف کی کوئی امید نہیں ہے۔

ایک اور ٹویٹ میں انہوں نے کہا کہ بلوچ پارلیمانی گروپ غیر پیداواری اور رد انقلابی جماعتیں ہیں، کیونکہ انہوں نے ریاست کی بربریت کو جائز قرار دیا ہے۔ وہ جو کر رہے ہیں اس کی توقع پہلے دن سے تھی۔ ریاستی ادارے وہی مظالم کر رہے ہیں جو بنگلہ دیش میں ہوئے تھے۔

ڈاکٹر اللہ نذر بلوچ نے کہا کہ ہم کبھی بھی انصاف کی بھیک نہیں مانگتے لیکن عالمی برادری کو محکوم قوموں کے تحفظ میں اپنے کردار کا احساس ہونا چاہیے۔ پاکستان اپنی بربریت جاری رکھی ہوئی ہے۔ انسانی حقوق کی تنظیموں اور بین الاقوامی میڈیا ہاوئسز کو اپنا کردار ادا کرنا چاہیے۔

جواب چھوڑ دیں

براہ مہربانی اپنی رائے درج کریں!
اپنا نام یہاں درج کریں